ہفتہ , ستمبر 21 2019
Home / تازہ ترین / آئی بیکس کا تحفظ کر رہے ہیں۔ ناصر حسین شاہ

آئی بیکس کا تحفظ کر رہے ہیں۔ ناصر حسین شاہ

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ میں بیس ہزار آئی بیکس موجود ہیں، حکومت ان کی افرائش نسل اور تحفظ کے لئے اقدامات کررہی ہے جبکہ پرندوں کے شکار کے لئے تین ماہ کے لئے لائسنس جاری کیا جاتا ہے۔ یہ بات سندھ کے وزیر جنگلات و جنگلی حیات سید ناصر حسین شاہ نے جمعرات کو سندھ اسمبلی میں محکمہ جنگلات و جنگلی حیات سے متعلق وقفہ سوالات کے دوران ارکان کے مختلف تحریری و ضمنی سوالوں کا جواب دیتے ہوئے بتائی۔

ایم کیو ایم کے پارلیمانی لیڈر کنور نوید جمیل نے کہا کہ عموماً پرمٹ رشتے داروں کے ہی نکلتے ہیں اسکی وجہ کیا ہے؟ جس پر ناصر شاہ نے کہا کہ ہمارے ہاں ایسا نہیں ہوتا بلکہ شفاف طریقہ کار کے مطابق کام ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ فیلکن کی نسل کے فروغ کے لئے محکمہ مختلف اوقات میں اقدامات اٹھاتا رہتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ فیلکن زیادہ تر ناردرن علاقوں میں پائے جاتے ہیں انکے مارنے یا شکار کرنے پر پابندی ہے۔

پیپلز پارٹی کی خاتون رکن شمیم ممتاز نے دریافت کیا کہ درخت لگانے کا ٹارگٹ کیا رکھ اگیا ہے۔ جس پر وزیر جنگلات نے بتایا کہ سندھ حکومت نے پانچ سالوں میں پانچ ہزار کلومیٹر پر درخت لگانے کا ہدف مقرر کیا ہے اور وزیراعلی سندھ نے درخت کاٹنے پر پابندی لگائی ہوئی ہے۔

وقفہ سوالات کے دوران سابق صدر آصف زرداری کے آبائی شہر نوابشاہ میں بےنظیرپارک کی تعمیرکا منصوبہ بھی زیر بحث آیا اور اس حوالے سے بڑے حیران کن حقائق ایوان کے سامنے آئے. ایوان کو بتایا گیا کہ نوابشاہ میں بےنظیربھٹو سینٹرل پارک منصوبے کےلیے دوسال سے زمین نہیں مل سکی ہے۔ جبکہ اس اسکیم کا اعلان دو برس قبل کیا گیا تھا۔

ایک سو پچاس ملین روپے کی لاگت سے بےنظیرسینٹرل پارک بنایا جانا تھا تاہم گزشتہ مالی برس تک بےنظیرپارک کے لئے زمین کی نشاندہی نہیں کی گئی اورجنوری 2018 میں محکمہ جنگلات نے بےنظیرسینٹرل پارک اسکیم کوہی ختم کردیا.

Check Also

سمیڈا کے زیر اہتمام اسکلز اولمپکس کا انعقاد

کراچی (اسٹآف رپورٹر) سمال اینڈ میڈیم انٹر پرائزز ڈویلپمنٹ اتھارٹی ’سمیڈا‘ کے زیر اہتمام اسکلز …